qaumikhabrein
Image default
ٹرینڈنگقومی و عالمی خبریں

نجف اشرف، کربلا اور کاظمین کے عَلم و تبرکات حاصل کرنے کا نادر موقع

مرکز افکار اسلامی کی جانب سے نہج البلاغہ سے آشنائی کے سلسلہ میں “نہج البلاغہ اور کربلا” کے عنوان سے ایک پروگرام کا اہتمام کیا جا رہا ہے۔اس مقابلے میں کامیاب ہونے والے افراد کو نجف اشرف، کربلا اور کاظمین کے عَلم و تبرکاتقسیم کئے جائیں گے۔مقابلے میں شرکت کے لئے خواہش مندوں کو مرکز افکار اسلامی کے یوٹیوب چینل “نہج البلاغ 1” (nahjulbalagha1) پر جاری پروگرام “نہج البلاغہ اور کربلا” کو دیکھنا ہوگا۔ اور “نہج البلاغہ اور کربلا” کے عنوان سے ۱۰ ویڈیوز میں سے ہر ویڈیو میں دئے گئے نہج البلاغہ کے دو حوالے نوٹ کرکے یکم ربیع الاول 1445ھ تک کل ۲۰ حوالے مرکز افکار اسلامی کی ویب سائٹ (www.afkareislami.com) پر موجود گوگل فارم یا واٹس اپ فارم کے ذریعہ ارسال کرنا ہونگے۔

انعامات اور ہدایا میں تبرک کے طور پر پہلا تبرک حرم امیر المومنين علیہ السلام کے گنبد کا پرچم اور اسی طرح دیگر حرم ہائے مطہر کے متعدد تبرکات تقسیم کئے جائیں گے۔
مرکز افکار اسلامی گذشتہ 22 سال سے کلام امیرالمومنین علیہ السلام کی خدمت میں مشغول ہے۔ نہج البلاغہ سے آشنائی اور اس کی نشر و اشاعت کے لئے اس مرکز کی جانب سے کئی اہم اقدامات کئے گئے۔
اسی سلسلہ کی ایک کڑی اس بار ایام محرم الحرام اور صفر میں “نہج البلاغہ اور کربلا” کے عنوان سے ایک پروگرام کا انعقاد بھی ہے۔اس مسابقہ میں مرکز افکار اسلامی کا ہدف کلام امام المتقین علیہ السلام کی نشر و اشاعت کے ساتھ ساتھ “نہج البلاغہ میں اصول اور کربلا میں اس کی عملی تفسیر” کو مدنظر رکھتے ہوئے حضرت سیدالشہداء علیہ السلام کے ان فرامین کو کربلا میں اجرائی کرنے کی عملی صورت کو پیش کرنا ہے۔

امیر بیان حضرت علی علیہ السلام نے نہج البلاغہ کے خطبہ 91 اور خطبہ 187 میں اعلان کیا ” مجھ سے پوچھ لو اس سے پہلے کہ مجھے نہ پاؤ” اور حکمت 147 میں جناب کمیل سے فرمایا “اس سینے میں علم کا ایک وسیع ذخیرہ موجود ہے، کاش اس علم کا لینے والا مجھے کوئی مل جاتا”۔
امیر المومنین علیہ السلام کے اس علم کا ایک ذخیرہ نہج البلاغہ کی صورت میں ہمارے پاس موجود ہے۔ کوشش ہونی چاہئے کہ اس خزانے سے کچھ لیں اسے اپنی زندگیوں کو سنوارنے کے لیے استعمال کریں اور دوسروں کو بھی اس سے آگاہ کریں۔

Related posts

اورنگ آباد میں عالمی اور قومی پوسٹ دن منایا گیا

qaumikhabrein

اسلام میں حسب نسب نہیں تقویٰ کی اہمیت ہے۔ مولانا شہوار حسین

qaumikhabrein

امروہا۔علما و ذاکرین کی ضیافت کا اہتمام

qaumikhabrein

Leave a Comment