qaumikhabrein
Image default
ٹرینڈنگقومی و عالمی خبریں

مذہبی جوش اور عقیدت سے منائی گئی عیدوں کی عید عید غدیر

بر صغیر ہندو پاک میں عاشقان مولا علی علیہ السلام نے نہایت عقیدت اور احترام کے ساتھ عید غدیر منائی۔ہندستان میں کشمیر سے لیکر کنیا کماری تک مختلف شہروں میں بڑی تعداد میں محبان اہل بیت نے مختلف عنوانات کے تحت عید غدیر کا جشن منایا۔اس روز کی مخصوص نماز ادا کی گئی۔ اعمال اور اذکار بجا لائے گئے۔ جلوس برامد کئے گئے۔مولا علی کی ولایت کے حوالے سے دینی مدرسوں میں پروگرام ہوئے۔ سیمناروں اور مذاکروں کا اہتمام کیا گیا۔۔ علما کی تقاریر ہوئیں اور مقاصدہ اور منقبت کی محفلیں آراستہ کی گئیں۔

عبادت خانہ حسینی۔ حیدر آباد

حیدر آباد کے نو تعمیر شدہ عبادت خانہ حسینی میں ہر سال کی طرح اس سال بھی روز غدیر کے نماز اور اعمال کے لئے مومنین
کا ہجوم نظر آیا۔ مومنین نے نماز اور اعمال مولانا حنان رضوی کی اقتدا میں انجام دئے۔

عبادت خانہ حسینی۔حیدر آباد

ادھر آندھرا پردیش کے نگرم میں مولانا عباس باقری کی نگرانی میں قائم مدرسۂ ولایت (پسران) و مدرسۂ قرآن و اہل بیت ع (دختران)میں روز غدیر کی مناسبت سے خصوصی پروگرام منعقد کئے گئے۔ مولانا باقری کی قیادت میں جلوس غدیر بھی برامد کیا گیا۔

کشمیر کے بڈگام میں روز غدیر کے حوالے سے مختلف پروگرام منعقد ہوئے جن میں کثیر تعداد میں محبان اہل بیت نے شرکت کی۔
کرگل میں مولا علی کی تاجپوشی کے جشن کی مناسبت سے جلوس ولایت برامد ہوا۔ جس میں بڑی تعداد میں مومنین شام ہوئے۔

کشمیر۔۔عید غدیر کانفرنس

لکھنؤ کے روضہ کاظمین میں جشن عید غدیر کا اہتمام کیا گیا۔ جس میں مقررین نے واقعہ غدیر کی اہمیت پر روشنی ڈالی اور مداحان اہل بیت نے مولائے کائنات کے حضور نزرانہ عقیدت پیش کیا۔لکھنؤ میں مختلف مقامات پر نماز اور اعمال بھی بجا لائے گئے۔

سرسی سنبھل،میرٹھ، اعظم گڑھ، کانودر گجرات،اورنگ آباد، پونے اور ممبئی میں بھی جشن عید غدیر تزک و احتشام کے ساتھ منایا گیا۔

واقعہ غدیر سن دس ہجری میں اٹھارہ ذی الحجہ کو اس وقت رونما ہوا جب رسول اپنے آخری حج سے واپس آہے تھے ۔ جبریل امین وحی لیکر نازل ہوئے۔
سورہ مائدہ آیت 67# ترجمہ: اے پیغمبر! جو اللہ کی طرف سے آپ پر اتارا گیا ہے، اسے پہنچا دیجئے اور اگر آپ نے ایسا نہ کیا تو اس کا کچھ پیغام پہنچایا ہی نہیں اور اللہ لوگوں سے آپ کی حفاظت کرے گا، بلاشبہ اللہ کافروں کو منزل تک نہیں پہنچایا کرتا.

آیت نازل ہونے کے بعد رسول اللہ (ص) نے غدیر کے میدان میں کاروان کو رکنے کا حکم دیا اور فرمایا: جو آگے چلے گئے ہیں انکو واپس بلایا جائے اور جو ابھی نہیں پہنچے انکا انتظار کیا جائے۔ رسولہ اللہ نے حاجیوں کے اونٹوں کے پالان کا ایک منبر تیار کرایا
نماز ظہر ادا کرنے کے بعد رسول خدا (ص) نے منبر پر جا کر خطبہ دیا جو خطبۂ غدیر کے نام سے مشہور ہوا اور اس کے ضمن میں رسول اللہ (ص) نے فرمایا:
“خداوند متعال میرا ولی ہے اور میں مؤمنین کا ولی ہوں، پس میں جس کا مولا ہوں علی (ع) بھی اس کے مولا ہیں”۔

Related posts

ماگام میں جشن نو روز کے حوالے سے سیمنار

qaumikhabrein

پاکستان کی معیشت تباہی کے دہانے پر۔ ریٹنگ بی نیگیٹو سے ٹرپل سی پلس ہو گئی

qaumikhabrein

فاروق عبداللہ سرینگر کے اسپتال میں زیر علاج۔

qaumikhabrein

Leave a Comment