qaumikhabrein
Image default
ٹرینڈنگجموں و کشمیرقومی و عالمی خبریں

یونیورسٹی آف کشمیر میں منایا گیا یوم عالمی تھیٹر

کشمیر یونیورسٹی میں بھی ہفتے کے روز تھیٹر کا عالمی دن منایا گیا۔ اس موقع پر سالانہ سونزل کے دوران تقریب کا اہتمام کیا گیا، جس میں یونیورسٹی میں زیر تعلیم طلباء کے ایک گروپ نے بے روزگاری سے متعلق ایک ڈراما پیش کیا۔

اس حوالے سے تھیٹر اور فن سے وابستہ میڈیا ایجوکیشن ریسرچ سینٹر میں زیر تعلیم آخوں فیصل کی ہدایات اور تیار کردہ اسکیٹ موصوف کے ٹیم بشمول، عمران بشیر، فرح فاروق، سائقا داوود، مارکی عادل، بسما متو، عباس کشمیری، انشاء جان، فریالا فاروق، مہوش منظور، سارا میر، و دیگر طلباء کی جانب سے بے روزگاری سے متعلق ایک اسکیٹ ڈراما پیش کیا گیا۔
اس موقعہ پر فن سے وابستہ افراد نے تھیٹر کے رموز سے آشنا ہونے کے مقصد کے لئے ورکشاپس کے انعقاد پر زوردیا تاکہ نئی تکنیک کو بروے کار لاکر لوگوں کو تھیٹر کی طرف راغب کیا جاسکے۔

اداکار آخون فیصل نے جموں و کشمیر پریس سروس سے بات کرتے ہوئے بتایا کہ وادی کشمیر میں تھیٹر کو عالمی دن منانے تک ہی محدود رکھا گیا ہے ۔جبکہ فن ،ادب اور دیگر منسلک شعبے اس کی آبیاری کےلئے بہت کم توجہ دیتے ہیں ۔تھیٹر کا مطلب عرف عام میں کسی کہانی کو ناظرین کے سامنے ڈرامے کے انداز میں پیش کرنا ہے۔

میڈیا ایجوکیشن ریسرچ سینٹر میں پروفیسر ناصر مرزا نے بتایا کہ تھیٹر کی تاریخ بہت قدیم ہے ۔اس کا آغاز 2500قبل مسیح میں مصر سے ہواتھا بعد میں اسے یونانیوں نے پروان چڑھایا ۔جبکہ شیکسپیئر جیسے عظیم ڈرامہ نگار نے بھی تھیٹر کو دوام بخشا ہے۔(حرہ فیضان۔کشمیر)

Related posts

پاکستان کے ایٹمی سائنسداں ڈاکٹر عبدالقدیر خان کا انتقال۔

qaumikhabrein

ڈاکٹر مہتاب امروہوی فکر تونسوی پر سیمنار میں کلیدی خطبہ دیں گے

qaumikhabrein

اسرائیل۔ حماس جنگ اور ہمارا حاشیہ بردار میڈیا۔ سراج نقوی

qaumikhabrein

Leave a Comment